آرمی چیف کے مشکورہیں کہ انہوں نے اپناحصہ قبائلی اضلاع کودیا، محمود خان فوٹو: محمود خان

پشاور: خیبرپختونخوا حکومت نے قبائلی اضلاع کے بے روزگار مرد وخواتین کے لیے انصاف روزگار اسکیم کا اجراء کردیا ہے۔

وزیراعلیٰ ہاﺅس پشاور میں قبائلی اضلاع میں انصاف روزگار اسکیم کے اجرا کے حوالے سے تقریب منعقد کی گئی، جس میں وزیر اعلیٰ محمود خان، وزیراطلاعات شوکت علی یوسفزئی ، وزیرخزانہ تیمور سلیم جھگڑا ،وزیر خوراک قلندر لودھی اور دیگر بھی موجود تھے۔

تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعلیٰ محمودخان نے کہا کہ فاٹا ہمارے لیے چیلنج تھا، فاٹا کا انضمام بڑامرحلہ تھا جو ہم نے مل کر طے کیا، لیویز اور خاصہ داروں کا مسئلہ بھی حل کیااور مخالفین کی مخالفتوں کاسامنا بھی کیا، ہم نے چارج سنبھالا تو قبائلی اضلاع کی حالت بری تھی، ہم نے قبائلی عوام سے رائے لی اور پھر10 سالہ ترقیاتی پروگرام بنایا۔ پورے ملک سے زیادہ فنڈز قبائلی اضلاع میں خرچ کریں گے یہ ہمارا عہد اور وزیراعظم پاکستان کا عزم ہے ۔

محمود خان نے کہا کہ ہم آرمی چیف اوران کی ٹیم کے مشکورہیں کہ انہوں نے اپناحصہ قبائلی اضلاع کودیا، روزگار اسکیم بڑا منصوبہ ہے جس سے تبدیلی آئے گی اور اس اسکیم سے 5500 افراد کو قرضے دے رہے ہیں۔ قبائلی اضلاع اورسابقہ ایف آر ریجنز سے 2000 سے زائددرخواستیں موصول ہوئیں، اس اسکیم کا بنیادی مقصد صوبہ خیبرپختونخوا کے نئے اضلاع میں غربت اور بیروزگاری کا خاتمہ اور وہاں کے عوام کو ایک باعزت اور پائیدار ذریعہ معاش مہیا کرنا ہے تاکہ یہ لوگ آنے والی نسلوں کیلئے ایک ترقی یافتہ اور خوشحال پاکستان کی بنیاد رکھنے میں اپنا کردار ادا کر سکیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here